About Us 2019-01-18T16:17:49+00:00

ABOUT MEHRBAN                                   مہربان کے بارے میں

Mehrban Ali is 41st son of Imam Ali A.S. He was born on 1st December 1987 in a small town of Tando Mohammad Khan which is 40 kilometers away from South of Hyderabad in Sindh province of Pakistan.

In his childhood, Mehrban was very attached with his grandfather (Syed Hussain Shah Shamsi Sabzwari Tabrezi). Who was master of Astrology, Palmistry, Ilm-e-Jafar, Jinnat, face reading and Tabeer-e-Khuwab.

سید مہربان علی شمسی سبزوای تبریزی امام علی علیہ السلام کے اکتالیسویں پوتے ہیں، جن کی ولادت 1 دسمبر 1987 میں ایک چھوٹے شہر سے ٹنڈومحمد خان میں ہوئی جو کہ صوبہ سندھ کے شہر حیدرآباد سے 40 کلومیٹر جنوب کی طرف واقع ہے۔

بچپن سے سید مہربان علی شمسی سبزواری تبریزی اپنے دادا سید حسین شاہ شمسی سبزواری تبریزی سے بہت زیادہ لگائو رکھتے تھے۔ جو کہ علم جفر کے ماہر تھے جس کی روشنی میں وہ علم نجوم، دست شناسی، چہرہ شناسی، تعبیر خواب اورجنات(کالا جادو) کی معلومات رکھتے تھے۔

Syed Hussain Shah Shamsi Sabzwari Tabrezi                                                                                              

From childhood, Mehrban was keen in learning these uloom (Knowledge).As he grew up, he was very passionate about reading his family books which he got from his grandfather or other books about the same topics that would increase his knowledge.

Mehrban Ali wasn’t like the other kids who were always interested in playing games. He spent his school time with his grandfather to learn this as he serves humanity.                                                                                                                                                                                                 

                                           

                   سید حسین شاہ شمسی سبزواری تبریزی

بچپن سے ہی مہربان علی علم سیکھنے کا شوق رکھتے ہیں۔ تبھی جیسے جیسے وہ بڑے ہوئے انہوں نے اپنی قدیمی خاندانی کتابیں پڑھنا شروع کیں جو کہ اُن کو اُن کے دادا سے ملیں۔ اس کے ساتھ ساتھ  انہی علوم کے متعلق جو جو کتابیں اُن کو ملتی رہتیں وہ پڑھتے رہتے تاکہ اپنے علم کو اور وسیع کر سکیں۔
بچپن سے ہی وہ عام بچوں سے مختلف تھے تبھی اُن کوبچپن میں کھیلنے کا بالکل شوق نہیں تھا۔ مہربان علی اسکول کا وقت بھی اپنے دادا
کے سائے میں گزارتے تھے تاکہ وہ علم کو سمجھ کے لوگوں کی خدمت کر سکیں۔

Dargah Syed Hussain Shah Shamsi Sabzwari Tabrezi                                                    

Dargah Syed Hussain Shah Shamsi is in Tando Mohammad Khan 40 kilometers away from Hyderabad.
This Dargah is almost 300 years old, where Mehrban’s ancestors are buried, who migrated from Multan to Sindh.

درگاہ سید حسین شاہ شمسی سبزواری تبریزی

درگاہ سید حسین شاہ شمسی سبزواری تبریزی ٹنڈو محمد خان میں موجود ہے جو کہ سندھ کے شہر حیدرآباد سے 40 کلومیٹر دور جنوب کی طرف واقع ہے۔

یہ درگاہ تقریباََ 300 سال پرانی ہے جہاں مہربان علی کے بزرگوں کے روزے ہیں جوکہ ملتان سے سندھ میں آئے تھے۔

Hair Of Rasool Akram S.A.W

Alhamdolillah! One of our dearest friend Mr. Salman has gifted us his priceless thing of Life that is The “Hair of Rasool e Pak Sallaho Aleh Wa’Alehi Wassalam”, which he got from Mr. Mohammad Sohail Faqir Qadri Meharvi from Sukkur. That Precious Hair of Rasool e pak sallaho Aleh Wa’Aalehi Wassalam is available at Dargah Syed Hussain Shah Shamsi Sabzwari Tabrezi for  those Momineen  who are visiting.

موئے مبارک

اللہ کے فصل و کرم سے ہمارے پیارے دوست محمد سلمان نے اپنی زندگی کی سب سے انمول چیز اللہ کے رسول حضرت محمد مصطفٰی صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے پاک موئے مبارک جو اُن کو محمد سہیل فقیر قادری مہروی سکھر والے سے ایک انمول تحفہ بن کے ملا تھا تو انہوں  نے اللہ کے رسول حضرت محمد مصطفٰی صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے موئے مبارک کو فی سبیل اللہ ایک سیدزادہ سمجھ کر مجھے اس انمول تحفہ سے نوازا۔ میں نے اُس پاک مقدس تحفہ کی زیارت کرنے کے بعد یہ چاہا کہ ہر خاص و عام جو اللہ کے رسول حضرت محمد صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم سے عشق کرتا ہے اِس کی زیارت کر سکے تبھی ہم نے ہمارے آقا کے موئے مبارک کو ایک محدود وقت کے لیے درگاہ سید حسین شاہ شمسی پہ رکھ دیا ہے اگر آپ اللہ کے رسول حضرت محمد صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے موئے مبارک کی  زیارت کرنا چاہتے ہیں تو آج ہی اِس امام بارگاہ پہ آئیں اور رسول اللہ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے موئے مبارک کی زیارت کرکے اپنا ایمان تازہ کریں۔

Ziyarat e Turab                       

Many years ago, Hazrat Shah Shams Tabrez’s tribe migrated to Sindh. There was a female whom people knew as Syeda Badshah Bibi. She had her own respect among people. Many females visited her for her (Ziyarat), also took taveez for themselves.
Bibi Badshah Zadi used to take people every year with her to visit Imam e Hussain A.S. Its been done for many years. But when her time came and she found that people of Sindh love Imam Hussain A.S a lot and want to visit his shrine but many of them don’t have that much wealth for travel. So she decided to bring soil of the grave of Imam Hussain A.S, also brought soil from the grave of Imam Ali A.S for those  people who can’t afford travel, can ziyarat that Turab (Soil of grave of Imam Hussain as & Imam Ali A.S).
This Turab is also available today at shrine of Dargah Syed Hussain Shah Shamsi Sabzwari Tabrezi as people can visit and make fresh their spirit.
Mehrban Ali decided to carry on that mores and In Shaa Allah on the day of Eid e Ghadeer Mehrban Ali will send 2 Momineens to Ziyarat e Karbala Moula (A.S) to those who visited Dargah Syed Hussain Shah Shamsi Sabzwari Tabrezi and filled detail and put their names in boxes which are placed there for the same purpose. Along with this Mehrban Ali will also provide this chance to those who are unable to come at Dargah can also take part in this draw through his website.

زیارتِ تُراب

آج سے کئی سو سال پہلے حضرت شاہ شمس تبریز کے خاندان نے سندھ کی طرف ہجرت کی۔ جس میں ایک خاتون تھیں جنہیں زمانہ سید بادشاہ بی بی کے نام سے بُلایا کرتا تھا۔ جن کی اُس وقت کے لوگوں کے درمیان ایک الگ ہی اہمیت تھی۔ کافی خواتین میلوں سفر کر کے اُن کی زیارت کو آتی تھیں اور اپنے اور گھر والوں کے تعویزات لیتی تھیں۔

بی بی بادشاہ زادی ہر سال اپنے ساتھ مومنین کو امام حسینؑ اور امام علیؑ کی زیارت کو لیکر جاتی تھیں جو مومنین اپنے دامن میں وسعت نہیں رکھتے تھے۔ کیوں کہ سندھ کے لوگ امام حسینؑ اور امام علیؑ کے ساتھ انسیت رکھتے ہیں اور یہ سلسلہ سالہا سال چلتا رہا مگر جب اُن کو معلوم ہوا کہ اُن کی زندگی کے ایام کافی کم بچے ہیں تو انہوں نے امام حسینؑ اور امام علیؑ کی آخری زیارت کے بعد امام حسیبنؑ اور امام علیؑ کے قبر مبارک کی مٹی وہاں سے لیکر آئیں تاکہ مومنین اُس قبر مبارک کی مٹی کی زیارت کرکے شرف حاصل کر سکیں۔

آج بھی وہ مٹی درگاہ سید حسین شاہ شمسی سبزواری تبریزی پر موجود ہے تاکہ کو جو مومنین کربلا جا نہیں سکتے وہ قبر مبارک امام حسینؑ اور امام علیؑ کی قبر کی مٹی کی زیارت کر کے اپنا ایمان تازہ کر سکیں۔

اِسی رسم کو بڑھاتے ہوئے مہربان علی نے یہ فیصلہ کیا ہے کہ وہ بھی ہر سال جتنی اللہ تعالیٰ نے اُن کے دامن میں وسعت دی ہے اُن کے تحت مومنین کو کربُلا بھیجا کریں گے۔ اُن مومنین کو جو درگاہ سید حسین شاہ شمسی سبزواری تبریزی پر موجود دبوں میں اپنا نام شہر کا نام اور موبائل نمبر لکھ کرفی سبیل اللہ  ڈالتے ہیں انشاءاللہ انہی خوش نصیبوں میں سے قرعہ اندازی کے ذریعے عیدِ غدیرکے دن 2 مومنین کو کربلا بھیجا جائے گا۔

جو مومنین درگاہ سید حسین شاہ شمسی سبزواری تبریزی پر آنہیں سکتے اُن مومنین کے لیے مہربان علی نے اپنی ویب سائٹ پہ فی سبیل اللہ طریقے کار رکھا ہے جس کے ذریعہ وہ بھی قرعہ اندازی کا حصہ بن سکیں گے انشاءاللہ۔

Water Of Healing

There is water arround shrine of Hazrat Ghazi Abbas Alamdar which do Tawaf every time of the Shrine of Ghazi Abbas Alamdar. Nobody knows from where that water comes from. That water never fetid. That Water is called Water of healing.
Syed Mehrban Ali Shamsi Sabzwari Tabrezi brings that water from the Shrine of Hazrat Ghazi Alamdar and make it available on the Dargah Syed Hussain Shah Shamsi Sabzwari Tabrezi for those patient who does not get heal. In Shaa Allah after using this water they will be healed by the grace of Allah. In Shaa Allah.

آبِ شفاء

حضرت غازیِ عباس علمدار کی قبرِ مبارک کو پانی طواف کرتا ہے، جس کو آبِ شفاء  کہا جاتا ہے  یہ پانی کہاں سے آرہا ہے اِس کا کسی کو کوئی علم نہیں ہے اور یہ مسلسل مولا غازیِ عباس کا طواف کرتا رہتا ہے اور اِس پانی میں کبھی کوئی بدبو بھی نہیں ہوئی۔ وہی پانی جس کو آبِ شفاء کہا جاتا ہے مہربان علی نے درگاہ سید حسین شاہ شمسی سبزواری تبریزی فی سبیل اللہ مومنین کے لئے رکھ دیا ہے۔  تاکہ درگاہ پہ آنے والے زیارت کے بعد اگر وہ پانی حاصل کرنا چاہیں تو وہاں سے وہ پانی حاصل کر سکیں جو کہ مریضوں کے لئے  شفاء ہے کوئی بھی مریض ہو جس کا کوئی علاج نہ ہو وہ انشاءاللہ اِس پانی کو پی کے صحت یاب ہو جائے گا۔

Ginan & Used Stones Of Shah Shams Tabrez (R.A.)

Poetry of Shah Shams Tabrez and written prays (Ginan) are still being used at many places. His own written prays (Ginan) & Poetry of his era are available at the Dargah Syed Hussain Shah Shamsi Sabzwari Tabrezi as people can visit and read those precious poetry and prays.

Along with that The Stone which Shah Shams Tabrez used to wear in his neck is also available there along with many spiritual personalities used stones are available there i.e. Syed Kabir Shah Shamsi Sabzwari Tabrezi, Syed Hussain Shah Shamsi Sabzwari Tabrezi as people can visit and see these precious stones for blessing.

حضرت شاہ شمس تبریزؒ کے گنان اور پتھر

حضرت شاہ شمس تبریزؒ کی شاعری اور لکھے ہوئے گنان جو کے آج بھی مومنین کافی جگہوں پہ استعمال کیا کرتے ہیں۔ اُن کے ہی ہاتھوں کے لکھے ہوئے انہی کے زمانہ کے مہربان علی صاحب نے اپنے دادا سید حسین شاہ شمسی سبزواری تبریزی کے درگاہ پہ رکھ دیے ہیں تاکہ جومومنین شاہ شمس تبریزؒ کو دیکھ نہیں پائے وہ آج بھی اگر چاہیں تو اُن کے ہاتھ کے لکھے ہوئے گنان  کی زیارت کر کے اپنے ایمان کو تازہ کرلیں۔

اِس کے ساتھ ساتھ شاہ شمس تبریز کے گلے میں پہنے ہوئے پتھر جو وہ استعمال کیا کرتے تھے وہ پتھر اور اُن کے ساتھ ساتھ مہربان علی کے جو بھی بزرگِ اشخاص تھے جس میں اُن کے دادا سید حسین شاہ شمسی سبزواری تبریزی اور حضرت کبیر شاہؒ اور اُن کے بزرگ جو جو پتھر، تعویز تسبیحات استعمال کیا کرتے تھے وہ بھی اُن کے ساتھ رکھوا دی ہیں تاکہ کو مومنین اُن سب چیزوں کی بھی زیارت کر سکیں۔

Taveez e Shams

In this world there are many people who are facing bad sight and black magic. Due to which they face many problems in life, they also can’t focus on their vision and life goals. Hazrat Shah Shams Tabrez had written a Taveez for this matter. Which is made from the Ayat e Kareema (Quran e Pak). From the blessing of Allah and by wearing this Taveez, black sight and black magic does not work and people get to the success from failure.
That is the reason for which we have made it available at the Dargah of Syed Hussain Shah Shamsi Sabzwari Tabrezi as everyone can purchase this and get its benefit.
It’s suggested for anyone who is facing black magic or bad sight to visit Dargah Syed Hussain Shah Shamsi Sabzwari Tabrezi and get this taveez FEE SABI LILLAH and get success.
Indeed, Allah is great, and He has put blessing in his words (Ayat e Kareema)

تعویزِ شمس

جب جب کوئی بھی شاہ شمس تبریزؒ کے پاس پریشانِ حال آتا تو شاہ شمس تبریزؒ اُس کو یہ مقدس تعویز لکھ  کے دیتے تھے اور شاہ شمس تبریزؒ فرماتے! اُس مقدس تعویز کو اپنے بازو یا گھر میں رکھو تا کہ جو مسئلہ مسائل ہیں وہ اللہ کے کرم سے اور اِس تعویز کی برکت سے ساری مصیبتیں اور مسئلہ مسائل دور ہو جائیں۔ یہ لکھا ہوا تعویز پاوڈر کاپی میں مہربان علی شمسی نے سید حسین شاہ شمسی سبزواری تبریزی کی درگاہ پہ رکھ دیا ہے تاکہ کہ وہ مومنین جو پریشانِ حال اور مصیبتوں کے مارے ہیں وہ درگاہ سید حسین شاہ شمسی سبزواری تبریزی پہ جا کر وہ مقدس تعویز فی سبیل اللہ (جو تعویز آپ  ہماری ویب سائٹ پہ دیکھ سکتے ہیں) آپ اِس درگاہ سے حاصل کر سکیں۔ پاوڈر کاپی میں جو کہ آپ دی گئی ہدایت کے تحت استعمال کریں جس سے انشاءاللہ آپ تمام مسئلہ مسائل سے نجات پا سکیں گے۔

Mehrban Ali Early Life.

He started becoming very busy in these Uloom to serve humanity that he started getting less and less time to recite Noha Khuwani and Naat Khuwani. After which Mehrban started to record his voice when he would recite the Quran, which people started liking and listening to. He would recite Quran and also share translation in Urdu. Over time people grew keen of listening him recite.

During this period, Mehrban had to do back and forth travel between Hyderabad and Karachi, since most of the TV Channels are situated in Karachi. Therefore Mehrban and his family decided to move to Karachi, so that Mehrban can keep spreading his Uloom (knowledge) with rest of the people using satellite media.

Now Mehrban writes books about these topics to reach a greater audience and so that he can share his knowledge to people. He also records videos while talking about these Uloom, and this website houses all of that together, so that you can read and listen to what knowledge you can learn from him.

مہربان علی کی شروعاتی زندگی۔

بچپن سے ہی مہربان علی نوحہ خوانی اور نعت خوانی کا شوق رکھتے تھے جس کے لئے وہ ٹنڈومحمد خان سے حیدرآباد اپنے استاد محمد شفیع وارثی صاحب کے پاس نوحہ اور نعت خوانی سیکھنے جاتے تھے اور یہ سلسلہ کئی سالوں تک چلتا رہا جس کے دوران مہربان علی کے کئی سارے ایلبم بھی آتے رہے کیوں کہ روزانہ ٹنڈومحمد خان سے حیدرآباد جانے میں تقریباََ پورا دن لگ جاتا تھا تو مہربان علی کے خاندان نےیہ فیصلہ کیا کہ حیدرآباد منتقل ہو جاتے ہیں تاکہ مہربان علی کو سیکھنے میں آسانی ہو اُس کے بعد بھی یہ سلسلہ کافی سالوں تک چلتا رہا چونکہ مہربان علی نے سوچا کہ اپنے علوم کو دنیا تک پہنچائیں جس کے ذریعے انسانوں کی خدمت ہو سکے تو مہربان علی کافی عرصے سے کئی ٹی وی چینلز سے درخواست کر رہے تھے کہ وہ عوام کے پاس اپنے انٹرویو کے ذریعے اپنے پیغام کو دنیا تک پہنچا سکیں تو مہربان علی نے اپنا زیادہ سے زیادہ وقت اُن کو دینا شروع کیا اور وہ حیدرآباد سے کراچی جاتے تھے تاکہ اِس طرح کی تمام معلومات لوگوں تک پہنچا سکیں۔ اسی دوران اُن کا نعت خوانی اور نوحہ خوانی کا سلسلہ بھی چل رہا تھا چونکہ اُس دوران وہ اُن کو زیادہ وقت نہیں دے پا رہے تھے تو مہربان علی نے یہ سوچا کہ قرآنِ پاک کو آسان اردو میں ترجمہ کرکے رکارڈ کیا جائے تاکہ آنے والی نسلیں اُس کو سُن کر اُس سے فیض اور فائدہ حاصل کر سکیں لیکن حیدرآباد سے کراچی کا روزانہ سفر مہربان علی کےلئے کافی دشوار تھا  تبھی سید  مہربان علی کے خاندان نے یہ فیصلہ کیا کہ حیدآباد سے کراچی منتقل ہوجائیں تاکہ مہربان علی تمام چیزوں کو آسانی سے دنیا تک پہنچا سکیں۔ یوں مہربان علی نے کراچی میں کافی ٹی وی چینلز کو معلومات دینے کے ساتھ ساتھ  اپنی کتابیں لکھنی شروع کیں اورایک یوٹیوب چینل کے ذریعہ معلومات دینے کا سلسلہ شروع کیا جس کو اللہ پاک کی برکت سے لوگوں نے بہت چاہا جس چینل کے آج 15 لاکھ سے زائد سبسکرائبرز ہیں۔

Syed Fateh Ali Shamsi Sabzwari Tabrezi                   

Syed Fateh Ali Shamsi Sabzwari Tabrezi is Mehrban’s Father, he manages all of his appointments and helps the needy to fulfill the prerequisites and making sure that people get the help they are looking for. You can also request for an appointment in “Ask Mehrban” section of this website.

سید فتح علی شاہ شمسی سبزواری تبریزی

سید فتح علی شاہ شمسی سبزواری تبریزی مہربان علی کے والد صاحب ہیں جو اُن کی تمام تقرریوں کوسمبھالتے ہیں تاکہ وہ دیکھ سکیں کہ جو لوگ اُن سے بات کرنا چاہتے ہیں، ملنا چاہتے ہیں۔ تو وہ اُن کو صحیح گائیڈ کر سکیں تاکہ مومنین کو آسانی فراہم ہوسکے۔





Shan Ali Shamsi                                                                         

Shan Ali is the head of Shamsi bros Production, he is currently doing Masters in Film from Iqra University. Apart from this he has been working in Media industry for more than 15 years as an Animator and Visual effects artist. He manages the Mehrban Ali media cell and all the coverage.

سید شان علی شمسی

سید شان علی شمسی سبزوای تبریزی جو ہیں وہ شمسی بروز پروڈکشن کے ہیڈ ہیں اِس کے ساتھ ساتھ وہ ابھی اقراء یونیورسٹی سے ماسٹرز کر رہے ہیں۔ جس کے ساتھ ساتھ اُن کے پاس 15 سال کا تجربہ ہے مختلف ٹی وی چینلز میں کام کرنے کا جو کہ اینیمیٹر اور ویژل افیکٹز آرٹسٹ کا جو کہ پاکستان کے بڑے ٹی وی چینل میں کام کر رہے ہیں۔ اِس کے ساتھ ساتھ یہ مہربان علی کی جتنی بھی میڈیا سیل  اور کوریج ہیں اُن کو بھی دیکھتے ہیں اور ساتھ ساتھ مہربان فائونڈیشن جو کہ انشاءاللہ عنقریب آنے والا ہے اُس کو بھی وہ ہیڈ کرنے والے ہیں۔

Syed Jan Ali Shamsi

Syed Ali has more than 3 years of experience in Media industry as a designer and animator. Currently, he manages the books department of Mehran Ali. He is dealing with the designing and printing of the books sold worldwide. You can see these books in the books section of our website.

سید جان علی شمسی

 سید جان علی شمسی سبزواری تبریزی جن کو میڈیا انڈرسٹری میں کام کرنے کا (ڈیزائنر اور اینیمیٹر کا) 3 سال کا تجربہ ہے تو مہران علی نے اپنی کتابوں کا انتخاب کیا اور اپنی کتابوں کے ڈیزائنر کا ہیڈ بنا کے اپنی ساری کتابوں کی پرنٹنگ وغیرہ کا کام سید جان علی کے حوالے کردیا اور سید جان علی کی کوشش یہ ہوتی ہے کہ ہر کوئی اِن تمام کتابوں کو حاصل کر سکے۔ جو کہ ہماری ویب سائٹ پہ بھی موجود ہیں۔   

Imran Ali Shamsi                                                              

Imran Ali is a manager for Mehrban Ali and is managing Mehrban Stones service. He recently completed his Masters in Film from Iqra University. Apart from this, he has been working as a writer, sound designer and Director for Shamsi Bros Production, the media house responsible for all of the Mehrban Ali videos. You can watch these videos in the video section of our website, and if you are interested in the stones, please go to Mehrban Stones section.

سید عمران علی شمسی

سید عمران شاہ علی شمسی سبزواری تبریزی جو کہ مہربان علی کے مینیجر بھی ہیں اور مہربان اسٹونز کی تمام سروسز کو سپروائز کرتے ہیں۔ انہوں نے ابھی اپنا ماسٹرزاقراء یونیورسٹی سے مکمل کیا ہے، اِس کے ساتھ ساتھ وہ شمسی بروز پروڈکشن میں ایک مصنف، سائونڈ ڈیزائنر اور ڈائریکٹر ہیں اور ذمہ دارہیں مہربان علی کی تمام ویڈیوز کے۔